Sumandar Mein Utarta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain Sad Urdu Poetry

Sumandar Mein Utarta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain Sad Urdu Poetry


Sumandar Mein Utarta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain
Teri Aankhon Ko Parhta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Tumhara Naam Likhne Ki Ijazat Chhin Gayi Jab Se
Koi Bhi Lafz Likhta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Teri Yaadon Ki Khushbu Khirkiyon Mein Raqs Karti hay
Tere Gham Mein Sulagta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Main Hans K Jheel Leta Hoon Judai Ki Sabhi Rasmein
Gale Jab Uss K Lagta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Na Jane Ho Gaya Hoon Iss Qadar Hassas Main Kab Se
Kisi Se Baat Karta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Wo Sub Guzre Hue Lamhat Mujh Ko YaadAate Hain
Tumhare Khat Jo Parhta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Main Saara Din Bahot Masroof Rehta Hoon MagarJunhi
Qadam Choukhat Pe Rakhta Hoon Tou aankhen Bheeg Jaati Hain

Bare Logon K Oonche Badnuma Aur Sard Mahlon Ko
Ghareeb Aankhon Se Takta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain



Tere Kooche Se Ab Mera Ta’alluq Wajbi Sa Hay
Magar Jab Bhi Guzarta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

Hazaron Mausamon Ki Hukmarani Hay Mere Dil Per
Wasi Main Jab Bhi Hansta Hoon Tou Aankhen Bheeg Jaati Hain

............................................................................................................

سمندر میں اترتا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔
 
تیری آنکھوں کو پرہتا ہوں توآنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

مجھے آپ کا نام لکھنے کی اجازت ہے۔
کوئی بھی لافز لکھتا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

تیری یادوں کی خوشبو خرکیوں میں راقس کرتی ہے۔
تیرے غم میں سلگتا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

میں ہنس کے جھیل جانے دیتا ہوں جودائی کی سبی راسمین
گیلے جب اس کے لگتے ہیں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

نہ جانے ہو گیا ہوں اس قدر حساس میں کب سے
آپ کس کی آنکھوں میں پیدا ہوئے ہیں؟

وو سب گزرے ہوئے لمحت مجھے یاد آتے ہیں۔
آپ اپنا کھانا کہاں کھاتے ہیں؟

میں سارا دن بہوت مسروف رہتا ہوں مگر جونہی
قدم چوکھٹ پہ رکھا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

ننگے لوگون کے اونچے بد نما اور سرد محل کو
آپ کو اپنی آنکھوں پر توجہ دینے کی ضرورت نہیں ہے۔


تیرے کوچے سے اب میرا طالق واجبی سا ہے۔
مگر جب بھی گزرتا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔

ہزاراں موسموں کی حکمرانی ہے میرے دل پر
وصی میں جب بھی ہنستا ہوں تو آنکھیں بھیگ جاتی ہیں۔


Post a Comment

Previous Post Next Post

Smartwatch

Random Products