Ye Saal Bhi Aakhir Beet Gaya Sad Urdu Ghazal - Sad Urdu Poetry

Ab Yaad Dilayen Kia Tum Ko Sad Urdu Ghazal - Sad Urdu Poetry


Ab Yaad Dilayen Kia Tum Ko
Ye Saal Bhi Aakhir Beet Gaya

Aur Apna Bhi Koi Doosh Nahi
Ye Bazi Bhi Jag Jeet Gaya

Wo Sard Hawain Ab Bhi Hain
Rangeen Fizain Ab Bhi Hain

We Bheege Bheege Pani Ki
Pur Shoor Sadain Ab Bhi Hain

Mein Ab Bhi Udher Ko Jata Hun
Aur Dil Apna Sulgata Hun

Ab Tum Nahi Hote Sath Mere
Aur Hote Hain Khali Haath Mere

Pur Shor Sadain Poochti Hain
Wo Sard Hawain Poochti Hain

Wo Kahan Gaya Sathi Tera?
Kia Phir Ye Zamana Jeet Gaya?

Ye Saal Bhi Aakhir Beet Gaya
Ab Yaad Dilayen Kia Tum Ko
.....................................................................................................
اب یاد دلائیں کیا تم کو
یہ سال بھی آخر بیت گیا

اور اپنا بھی کوئی دوش نہیں۔
یہ بھی بھی جاگ جیت گیا

وو سرد ہوائیں اب بھی ہیں۔
رنگین فزائین اب بھی ہیں۔

ہم پانی پینے جا رہے ہیں۔
پور شور صدائیں اب بھی ہیں۔

میں اب بھی اُدھر کو جاتا ہوں ۔
اور دل اپنا سلگتا ہوں

اب تم نہیں ہوتے ساتھ میرے
اور ہوتے ہیں کھلی ہاتھ میرے

پور شور صدائن پوچھتی ہیں۔
وو سرد ہوائیں پوچھتی ہیں۔

تمہارا دوست کہاں گیا؟
اس بار کیوں ہار گئے؟
یہ سال بھی آخر بیت گیا

اب یاد دلائیں کیا تم کو




Post a Comment

Previous Post Next Post

Smartwatch

Random Products